Biden authorises $100m in emergency funds for Afghan refugees – World In Urdu Gul News

[ad_1]

وائٹ ہاؤس نے کہا کہ امریکی صدر جو بائیڈن نے جمعہ کو ہنگامی فنڈ سے 100 ملین ڈالر تک کی اجازت دی ہے تاکہ “غیر متوقع طور پر فوری” مہاجرین کو پورا کرنے کے ل to افغانستان کے خصوصی امیگریشن ویزا درخواست دہندگان سمیت افغانستان کی صورتحال سے دوچار ہوسکیں۔

وائٹ ہاؤس نے کہا کہ بائیڈن نے اسی ضروریات کو پورا کرنے کے لئے امریکی سرکاری ایجنسیوں کی انوینٹریوں سے 200 ملین ڈالر کی خدمات اور مضامین جاری کرنے کا بھی اختیار کیا۔

امریکہ ہزاروں افغان درخواست دہندگان کو خصوصی امیگریشن ویزا (SIVs) کے لئے انخلاء شروع کرنے کی تیاری کر رہا ہے جنھیں طالبان باغیوں سے انتقامی کارروائی کا خطرہ ہے کیونکہ انہوں نے امریکی حکومت کے لئے کام کیا۔

توقع کی جارہی ہے کہ انخلاء کرنے والوں اور ان کے کنبہ کے پہلے دستوں کو ماہ کے آخر سے پہلے ورجینیا میں واقع امریکی فوجی اڈے فورٹ لی روانہ کیا جائے گا جہاں وہ اپنے ویزا درخواستوں کی آخری کارروائی کا انتظار کریں گے۔

پینٹاگون نے پیر کے روز بتایا کہ تقریبا 2500 افغان باشندوں کو اس سہولت میں لایا جاسکتا ہے ، جو رچمنڈ سے 30 میل (48 کلومیٹر) جنوب میں واقع ہے۔

بائیڈن انتظامیہ ریاستہائے متحدہ اور بیرون ملک دیگر امریکی سہولیات کا جائزہ لے رہی ہے جہاں ایس آئی وی درخواست دہندگان اور ان کے اہل خانہ کو رہائش فراہم کی جاسکتی ہے۔

2001 کے امریکی قیادت میں حملے کے بعد امریکی حکومت کے ل to مترجم کی حیثیت سے یا دوسری ملازمتوں میں کام کرنے والے افغانی باشندوں کے لئے خصوصی تارکین وطن ویزا دستیاب ہیں۔

جمعرات کے روز ، امریکی ایوان نمائندگان نے ایسی قانون سازی کی جس میں ایس آئی اوز کی تعداد کو بڑھایا جائے گا جو 8،000 تک دی جاسکتی ہیں ، جس میں پائپ لائن میں تمام ممکنہ اہل درخواستوں کا احاطہ کیا جائے گا۔

امریکی حکام کا کہنا ہے کہ اس طرح کے تقریبا 18،000 درخواستوں پر کارروائی کی جارہی ہے۔

[ad_2]

Source link